کیڑے مار ادویات دو طرح کے اجزاء سے مل کر بنتی ہیں ایک کیڑے مار کیمیکل جنکو فعال اجزاء بھی کہا جاتا ہے اور دوسرے غیر فعال اجزاء۔ کیمیکل اپنی اصل حالت میں پانی میں  حل نہیں ہوتےاور کیمیائی طور پر غیر مستحکم ہوتے ہیں۔ان وجوہات کی بناء پر ان میں غیرافعال اجزاء شامل کئے جاتے ہیں جو کیمیکل کے لئے کیریئر کا کام کرتے ہیں ۔کیڑے مار ادویات کے لیبل پر غیر فعال اجزاء کی مقدار فیصد میں لکھ دی جاتی ہےاور انہیں "دوسرے اجزاء" کا نام دیا جاتا ہے۔ کیڑے مار ادویات   کے نام کے ساتھ کچھ  مختصر الفاط لکھے جاتے ہیں جو ان ادویات کے استعمال کے طریقے یا  انکی حالت کے بارے میں ہوتے ہیں۔ یہ ادویات استعمال کرنے سے پہلے ان الفاظ کا مقصد سمجھنا ضروری ہے۔کچھ الفاط مندرجہ ذیل ہیں۔

اے ایل: ایسے محلول جنکوپانی کے ساتھ ملا کر استعمال نہیں کیا جاتا

ڈی ایس: بیج کے خشک علاج کے لئے پاؤڈر

ڈی ٹی:براہ راست استعمال کرنے والی گولیاں

ایس جی:پانی میں حل ہو جانے والے دانے

پی اے:پیسٹ

ایس پی:پانی مین حل شدہ پاؤڈر

ایس ٹی:پانی میں حل ہونے والی گولیاں

ای سی: پانی میں  نہ حل ہونے والا مرکب

ای جی: پانی میں نہ حل ہونے والے دانے

ٹی بی:ٹیبلیٹ /گولیاں

ایف ایس:بیج پے لگانے والا محلول

ڈبلیو جی: پانی میں حل ہو جانے والے دانے

ڈبلیو ایس:پانی میں حل ہونے والا پاوڈر

ڈبلیو پی: نمی والا پاؤڈر

جی آر: دانےدار ادویات

ایل ایس:بیج پے لگانا والا محلول

 جی اے: گیس

ایف یو:دھواں بنانے والا کیمیکل

آر بی: بیٹ(استعمال کے لئے تیار)

ایس او:پھیلنے والا تیل

ای ڈبلیو:پانی میں تیل

جی ڈی؛ بغیر ملاوٹ کے استعمال کرنے والا جیل

جی ای:گیس بنانے والی مصنوعات

ایس سی: حل نہ ہونے والی مرکب

ایس ایل:حل ہونے والا مرکب

او ایل: تیل ملا ہوا پاؤڈر

اوپی: تیل مین غیرحل شدہ پاؤڈر

عام طور پر کیڑے مار ادویات پانی یا تیل کے ساتھ ملا کر استعمال کئے جاتے ہیں تاہم ، زیادہ تر بیٹس ، دانےدارادویات ، جیل اور پاؤڈربغیر کسی ملاوٹ کےاستعمال کئے جاتے ہیں۔ بہت سی مخصوص کیڑے مار ادویات جو گھروں میں استعمال ہوتی ہیں انکو بغیر ملاوٹ کے استعمال کیا جاتا ہے۔